آخری بار ریحام خان برطانیہ کی خفیہ ایجنسی ’’ایم آئی 6‘‘ کے دفتر کب گئیں تھیں؟ کیا برطانیہ خفیہ ایجنسی ریحام خان کو لانچ کر رہی ہے؟ ناقابل یقین خبر آگئی

اسلام آباد (ویب ڈیسک) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کی سابقہ اہلیہ ریحام خان نے کہا ہے کہ بہت لڑکیا ں جو خود کو تحریک انصاف میں خود کو محفوظ نہیں سمجھتیں رابطہ کرتی ہیں،پارٹی ٹکٹ اور سازگار ماحول نہ ہونے پر بھی پی ٹی آئی کارکن رابطے میں ہوتے ہیں۔نجی ٹی وی کے پروگرام ’’ آپس کی بات ‘‘ میں گفتگو کے دوران ریحام خان سے سوال پوچھا گیا کہ

’’آخری بار آپ ’’ایم آئی 6‘‘ کے دفترکب گئی تھیں؟کیونکہ بہت سے میڈیا کے دوست کہتے ہیں کہ آپ کاایم آئی 6کے ساتھ تعلق ہے اور آپ کو لانچ کیاجارہاہے‘‘جس پر جواب دیتے ہوئے انہو ں نے کہا کہ میرا کبھی ’’ایم آئی 6‘‘ ہیڈ کوارٹر جانے کا اتفاق نہیں ہوا،مجھے اس کا بھی افسوس نہیں ہے، تحریک انصاف فیصلہ کرلے کہ میں حسین حقانی کے ساتھ سی آئی اے ایجنٹ ہوں ، ایم آئی 6ہوں یا ’’را‘‘ہوں ، اب تو صرف ’’موساد‘‘ ہی رہ گئی ہے، میں کہتی ہوں کہ جن جن کی میں ایجنٹ ہوں مجھے میں ’’سیلری ‘‘ تو بھیجیں۔یہاں تو مجھے لگ رہا ہے کہ بدنام بھی ہورہی ہوں اور کچھ مل بھی نہیں رہا ، میں تو برداشت کرلوں لگی لیکن یہ ہماری ایجنسیز پر الزام لگا رہے ہیںکہ ایک شخص پاکستان میں رہ رہا ہے اور اس کا غیر ملکی ایجنسی سے رابطہ ہے اگر ایسا ہے تو اسے گرفتار کریں ۔ریحام خان نے کہا کہ فواد چودھری کی پریس کانفرنس پر توجہ نہیں دینی چاہیے،کسی کو حق نہیں پہنچتا کہ مجھے وارننگ دے،تردید میں تب کروں جب میں نے کوئی بیان دیا ہ ہو جبکہ تردید تو پی ٹی آئی کو کرنی چاہیے۔ یہ کتاب حمزہ عباسی کی سوشل میڈیا پر ہے

وہ تردید کریں،میں کسی کی عزت نہیں اچھال رہی یہ خود باتیں کر رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ پی ٹی آئی سمجھتی ہے کہ وہ بڑی جماعت ہے،لیکن میں نہیں سمجھتی۔میری کتاب جب شائع ہو جائے،پھر جس کو جو کہنا ہے کہے،پی ٹی آئی کے کافی لوگ میرے ساتھ رابطے میں ہیں،یہی نہیں بہت لڑکیاں جو پی ٹی آئی میں خودکو محفوظ نہیں سمجھتیں رابطہ کرتی ہیں،پارٹی ٹکٹ اور سازگار ماحول نہ ہونے پر بھی پی ٹی آئی کارکن رابطے میں ہوتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں