کیا آپ جانتے ہیں کہ بھارت کی سابق وزیر اعظم اپنی شیطانی ہوس کی بھوک مٹانے کیلئے کیا کام کیا کرتی تھی ؟شرمناک انکشافات

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)بھارت کی سابق وزیر اعظم اندراگاندھی کا نیا جنسی سکینڈل سامنے آگیا ہے،جواہرلال نہرو کے ذاتی ملازم متھائی نے اپنی سوانح حیات میں انکشاف کیا ہے کہ ان کے جنسی تعلقات اندراگاندھی کے ساتھ مسلسل12سال تک رہے،یہ تعلقات اس وقت ختم ہوئے جب اس نے اپنی آنکھوں سیاندرا گاندھی کو ایک دوسرے شخص کے ساتھ جنسی خواہش پوری کرتے ہوئے دیکھا۔

بھارتی اسٹبلشمنٹ نے متھائی کی سوانح حیات میں سے اندراگاندھی کے ساتھ جنسی تعلقات پر مشتمل بابSHE کو غائب کردیا۔بھارت کی سابق وزیراعظم کے ذاتی ملازم متھائی کی کتاب نے بھارت کے علاوہ پوری دنیا میں دھوم مچارکھی ہے،بالخصوص سوشل میڈیا پر کروڑوں افراد اس کتاب کو پڑھ چکے ہیں،کتاب کے اقتسابات کے مطابق متھائی جواہرلال نہرو کا پرائیویٹ سیکرٹری تھاجس نے بطور سپیشل اسسٹنٹ1946تا1959تک نہرو کے ساتھ خدمات سرانجام دیں،تاہم متھائی نے سرکاری خدمات انجام دینے کی بجائے اندراگاندھی کے ساتھ خصوصی تعلقات قائم کئی جو 12سال تک رہے۔ یہ شخص متھائی نہرو خاندان کا انتہائی قریبی شخص تھا جو خاندان بارے تمام معلومات بھی رکھتا تھا۔ اس نے ایک کتاب تحریر کی جس کا نام تھاREMINISCENCES OF NEHROاس کتاب میں اس کے نہروخاندان کی اصلیت کا پردہ چاک کردیا ہے اور خاندان کے کئی رازوں سے پردہ اٹھایا ہے۔اس کتاب کے باب SHE میں اس نے اندراگاندھی کے ساتھ تعلقات کی تفصیلات بیان کی ہیں کہ یہ تعلقات کیسے پروان چڑھے اور کس بنیاد پر ان تعلقات کو منقطع کرنا پڑا۔ اس کتاب میں جواہرلال نہرو کی خواتین کے ساتھ قریبی اور جنسی جذباتیتعلقات بارے بھی آگاہ کیا گیا ہے۔اس کتاب میں نہرو کےEdwinaکے ساتھ معاشقہ کے علاوہ دیگر خوبصورت خواتین کے ساتھ معاشقوں کا تفصیل کے ساتھ ذکر کیا۔

کتاب میں متھائی لکھتا ہے کہ اندراگاندھی کاجوانی میں فیروز گاندھی کے ساتھ معاشقہ چلا جس پر نہروخاندان کے اندر شدید اضطراب پایا گیا۔ اندرا گاندھی اورفیروز گاندھی کایہ معاشقہ 12سال چلاجس میں ایک دفعہ اندرا گاندھی کو حمل بھی ٹھہر گیا۔متھائی لکھتا ہے کہ ایک شام کو اندرا گاندھی نے کہا کہ وہ ایک رات میرے ساتھ گزارنا چاہتی ہے میںیہ سن کرہکابکا رہ گیا۔ متھائی نے اندرا گاندھی کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ اس کو عورت کے ساتھ رات گزار نے کا کوئی تجربہ نہیں ہے، جس پر اندرا گاندھی نے اسے جنسی تعلقات بارے دو کتابیں دین،اگلی رات اندرا گاندھی مجھے ایک کمرے میں لے گئی اور مجھے زبردستی گلے سے لگا لیا اور مجھےBhupat کا خطاب دیا جبکہ میں نے اندرا کو پتلی کا نام دیا۔کتاب میں لکھتا ہے کہ اندراگاندھی جنسی تعلقات کی بھوکی تھی حالانکہ بظاہر وہ سخت گیر خاتون کے طور پر مشہور تھی۔ وہ لکھتا ہے کہ سابق بھارتی وزیراعظم اندراگاندھی کے جنسی تعلقات کئی مردوں کے ساتھ تھے ایک شام میں ان کے کمرے کے قریب گیا تو آنکھوں سے دیکھا کہ اندرا گاندھی ایک دراز قد شخص دھرندرا براہم چیئر کے ساتھ تھی جس کے بعد متھائی نے اندرا گاندھی کے ساتھ تعلقات ختم کرلئ

اپنا تبصرہ بھیجیں